میٹرک پاس ہوں، ٹیچرز نالائق سمجھ کر سب سے پیچھے بٹھاتے تھے: نسیم شاہ

قومی ٹیم کے فاسٹ بولر نسیم شاہ کا کہنا ہے کہ ان کی تعلیم میٹرک تک ہے اور دوران تعلیم ٹیچرز نالائق سمجھ کر کلاس میں سب سے پیچھے بٹھاتے تھے۔

نجی میڈیا سے گفتگو کے دوران فاسٹ بولر نسیم شاہ نے اپنے کیرئیر کے آغاز سمیت مختلف اور دلچسپ موضوعات پر گفتگو کی۔

اس دوران میزبان کے سوال پر نسیم نے بتایا کہ میری تعلیم میٹرک ہے، پڑھائی میں بہت اچھا نہیں تھا کیوں کہ اچھا طالب علم تب بنتا جب میں پورا دن کرکٹ نہ کھیلتا، میں پورا دن کرکٹ کھیلتا رہتا تھا اس لیے اچھا طالب علم کیسے بن پاتا۔

انہوں نے بتایا کہ کلاس میں ٹیچرز نالائق سمجھ کر سب سے پیچھے بٹھاتے تھے لیکن ہم نالائق نہیں تھے، بس ہم کلاس میں پیچھے بیٹھ کر ٹیمز بناتے تھے تاکہ بریک میں کرکٹ کھیل سکیں۔

دوران انٹرویو نسیم نے غیر ملکی صحافی کو 30 فیصد انگلش سے متعلق دیے گئے بیان پر بھی وضاحت دی اور کہا کہ وہ بیان میں نے سوچ سمجھ کر نہیں دیا تھا کیوں کہ میں ایک نیچرل سا انسان ہوں اور یہی رہنا چاہتا ہوں، میرا خیال ہے انسان کو جتنی انگلش آتی ہے اسے اتنی ہی بولنی چاہیے جتنی نہ آئے اس کا اعتراف کرتے ہوئے نہیں بولنا چاہیے، پہلے مجھے انگلش30فیصد آتی تھی لیکن اب میں انگلش پر کام کررہا ہوں اور میرے پاس اب 60 فیصد انگلش ہے۔

دوران گفتگو میزبان نے کرکٹر سے ان کی فیملی کے متعلق سوال کرتے ہوئے پوچھا کہ ان کی فیملی میں کتنے لوگ ہیں اور نسیم کا نمبر کون سا ہے ؟ اس پر نسیم نےبتایا کہ ہم 6 بھائی اور 2 بہنیں ہیں اور میرا نمبر jazz کا ہے۔

بعدازاں نسیم ہنس دیے اور بتایا کہ میرا نمبر تیسرا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *